اے سی کے بغیرگھر ٹھنڈا کریں ، مگر کیسے ؟

گزشتہ دنوں ماہرین کی ایک ٹیم نے تحقیقات کیں کہ ہر وقت کمروں میں اےسی چلا کر بیٹھنے سے صحت کے کئی طرح کے مسائل جنم لیتے ہیں ، جن میں سرفہرست مزاج کی تبدیلی ہے ۔ ماہرین نے مشورہ دیا ہے کہ اے سی انتہائی ضرورت پڑنے پر ہی استعمال کیا جائے ، ورنہ عام طور پر اےسی سے پرہیز ہی کیا جائے ۔ انہوں نے اس کا متبادل بھی پیش کیا ہے ۔ ان کے مطابق گھر کو اےسی کے بغیر بھی ٹھنڈا رکھا جا سکتا ہے ۔ اس کے لیے ضروری ہے کہ صبح و شام کے وقت ٹھنڈی ہوا کمروں میں زیادہ سے زیادہ داخل کی جائے ، جب کہ دوپہر کے وقت کمرے کے دروازے اور کھڑکیوں کو بند کر کے پردے یا بلائنڈرز گرا دیے جائیں ۔ حال ہی میں شائع ہونے والی ایک رپورٹ کے مطابق ماہرین نے کہا ہے کہ صبح کے وقت ناشتہ کھلی جگہ پر کیا جائے اور بچوں کو بھی صبح سویرے کھیلنے کا بھر پور موقع دیا جائے ۔ پنکھے بھی درجہ حرارت کم کرنے میں معاون ہوتے ہیں ۔اسی طرح ماہرین کے مطابق دوپہر کے وقت کچن میں کھانا پکانے کی بجائے کھلی جگہ پر کھانا پکایا جائے ، تاہم ناگزیر صورتحال میں کچن کا ایگزاسٹ فین چلانا نہ بھولیں ۔اس کے علاوہ گھر کے لان میں گھاس اور گھر کے دونوں اطراف درختوں کی موجودگی کو بھی یقینی بنایا جائے ۔ ماہرین کے مطابق اگر گھر میں ایک مرلہ گھاس کا لان ہے تو اس گھر میں تقریباً دو ٹن کے ائیر کنڈیشنر جتنی ٹھنڈک پیدا ہوسکتی ہے ۔