شادی مبارک !

خوش خبری آ نہیں رہی ۔۔۔۔ خوش خبری آ گئی ہے
عمران خان دھرنے میں کنٹینر پر کھڑے ہو کر کہتے تھے نواز شریف کے مستعفی ہونے پر ہی شادی کروں گا۔ جس کی وضاحت انہوں نے کچھ ایسی کی کہ میں قوم کی خوشی کےلیے اپنی ذاتی خقشی کو پس پشت ڈال رہا ہوں ۔جناب نے جو نہی اعلان کیا کے میں استعفیٰ کے بعدشادی کروں گا تو یہ بات جنگل میں آگ کی طرح پھیل گئی پھیلنی ہی تھی کیو نکہ اعلان بھی تو کنٹینر کے اوپر سے کیا تھا۔ اب کیا کہنے ہماری’ میرا’ جی کے انہوں نے عمران خان کو شادی کی آفر کر دی ۔۔۔۔
دھرنا ختم ہوا کنٹینر ہٹ گیا استعفیٰ ملنا نہیں تھا سو نہ ملا لیکن خان صاحب نے اپنی شادی ملتوی نہیں کی ۔ نجی چینل کے مطابق 7 محرم کو عمران خان کا نکاح ریحان خان کے ساتھ ہوا۔ جو بی بی سی میں کام کرتی تھیں ۔ عمران خان نےشرکاء کو  اس شادی کو مخفی رکھنےکا کہا اور کہا کے کسی مناسب وقت پر اس کا اعلان کریں گے ۔
پچھلے چند دنوں سے تبدیلی کے علمبردار کی شادی کی ادھوری کہانی میڈیا کی زینت بنی ہوئی ہے ۔ لیکن اب خان صاحب نے اپنی پریس کانفرنس کے دوران کہا ہے کہ قوم کو اسی ہفتے خوش خبری سنا وں گا(جیسے قوم بس اب اسی خوش خبری کے انتظار میں بیٹھی ہے ) ۔ چلیں جو بھی ہو آپ کو شادی مبارک